اس پیج پے بہت سی مختصر کہانیاں پوسٹ کی گئی ہیں. خود بھی پڑھیں اور سوشل میڈیا پے  بھی پوسٹ کریں  
 

آپ نے ناں نہیں کرنی

ترکی سیر سپاٹے کیلئے گئے

آدابِ زندگی

رات کا آخری پہر تھا اور سردی تھی

ڈاکٹر صاحب جلدی سےآئیے ایک ایمرجنسی کیس ہے

ابھی دو دن پہلے ہی لاہور اسٹیشن پر دیکھا ہے

پینسل میں پانچ باتیں ایسی ہیں جو ہم سب کے لیے جاننا ضروری ہیں

نو سال کا ایک معصوم سا بچہ

میں اور میری بیوی - موبائل پے بات چیت

آج چکڑ چھولے اور تلوں والا کلچہ کھانے کو جی چاہ رہا ہے

ھیرا یا کانچ

بے شک بچے نالائق ہی اچھے ہوتے ہیں۔

تین آدمی غار میں پھنس گے

ایک شاطردرزی

آج اس کا انٹرویو تھا

ایک حوصلہ مند بیوی

مرغی کے چوزے اور باز کا بچہ

امریکہ میں جب ایک قیدی کو پھانسی کی سزا سنائی گئی

ایک شخص گوشت کو فریز کرنے والے کارخانہ میں کام کرتا تھا

خلاف توقع بابا جی کے ہاتھ میں سمارٹ فون تھا

ایک عورت کا میاں نان پکوڑے کی ریڑھی لگاتا تھا۔

ہوٹل میں ایک سیاح داخل ہوا

ایک بادشاہ نے خوش ہو کر

سٹول کی تینوں ٹانگوں میں سے اہم ترین کون سی ہے

ایک خاتون کی عادت تھی

ﭘﮍﻭﺱ ﮐﺎ ﻣﮑﺎﻥ ﭘﺮﺍﻧﺎ ﺗﮭﺎ ﺍﻭﺭ ﺍﺱ ﻣﯿﮟ ﺑﮩﺖ ﺳﮯ ﻟﻮﮒ ﺭﮨﺘﮯ ﺗﮭﮯ

ﺳﻮﮨﻨﮯ ﺳﻮﮨﻨﮯ ﺟﻮﮌﮮ

مالدار آدمی کبھی کسی کی مدد نہیں کرتا تھا

ﺩﻭ ﺩﻭﺳﺖ ﺍﯾﮏ ﺑﯿﻨﮏ ﮐﮯ ﻣﻼﺯﻡ ﺗﮭﮯ

میں نے فخر سے کہا - اچھا بنک بیلنس ھے دو گاڑیاں ھیں

پچیس چھبیس سال کا خوبصورت نوجوان قتل کے مقدمے تھا

بابا بابا ! تِین دِن رہ گئے ہیں

کل وقار آیا تھا۔۔۔! ولایت میں رہتا ہے - واپس آتے ہی ملنے چلا آیا

پچاس لاکھ یا تیس لاکھ

بیوی کا عاشق

اپنا مسئلہ رکھ اپنے پاس۔ مجھے پیسے دے۔

چلو جی کڑهائی کھاتے ہیں

مجهے مارکیٹ جا نا تها ،میری دوست کی برتهہ ڈے پارٹی تهی

بس پہاڑی علاقے سے گزر رہی تھی

شاید سلطان اور اس کی بیوی

ایک خاتون نے اس سے آلو خریدے، ساتھ دھنیا مرچ بھی لی اور اسے

گھر برائے فروخت

ایک راجا تھا اسکے پاس بہت عمدہ قسم کے ھیرے تھے

ایک دلچسپ گفتگو

فرانس کے مشہور گاؤں ’’ کولمبے لیڈو زگ لیزا‘‘ کے ایک خوبصورت

گھر کی تمام مستورات سے کہا کہ تمام زیورات اتار دیں

ﺍﯾﮏ ﻟﮍﮐﮯ ﻧﮯ ﮐﭽﮭﻮﺍ ﭘﺎﻝ ﺭﮐﮭﺎ ﺗﮭﺎ

ایک شخص کا ایک بیٹا روز رات کو دیر سے آتا

میں غصے سے کھول رہا تھا

نرس نے روتے ہوئے جواب دیا

پتنگ دور کہیں گر گئی

ﻣﯿﺮﮮ ﺍﺳﺘﺎﺩ ﻧﮯ ﻣﺠﮭﮯ ﻣﺰﺩﻭﺭﯼ ﭘﺮ ﻟﮕﺎ ﺩﯾﺎ

سفید فام انگریز اور اسکی بیوی

مائی نیم از جینا

گزشتہ سال میرا آپریشن ہوا اور پتا نکال دیا گیا

اکیلی لڑکی، مدرسےکاطالب علم اور مسجد

ادب پہلا قرینہ ہے محبت کے قرینوں میں

ﭘﯿﭧ ﻣﯿﮟ ﺩﺭﺩ ﮐﺎ ﺑﮩﺎﻧﮧ ﺑﻨﺎ ﮐﺮ ﮔﻮﺩﯼ ﭘﺮﻟﯿﭩﺎ ﺭﮨﺎ

میں باغی نہیں ہوں

کہیں سے گهومتا پهرتا ایک سانپ گهس آیا

دو نوعمر بچوں کو بازار بھیجا

ایک چینی بڑھیا

جدید تعزیت نامہ

ﻣﯿﮟ ﺗﻤﮩﯿﮟ ﺍﻧﺴﺎﻥ ﮐﻮ ﺑﻨﺪﮦ ﺑﻨﺎﻧﮯ ﮐﺎ ﻧﺴﺨﮧ ﺑﺘﺎﺗﺎ ﮨﻮﮞ

جاکر وہ رستے میں گر پڑا اور اسکے کپڑے خراب ہوگئے

اللہ کتنا کبیر ھے؟

پچاس لاکھ یا تیس لاکھ

ﺳﻮﮨﻨﮯ ﺳﻮﮨﻨﮯ ﺟﻮﮌﮮ

مالدار آدمی کبھی کسی کی مدد نہیں کرتا تھا

ایک خاتون کی عادت تھی

سٹول کی تینوں ٹانگوں میں سے اہم ترین کون سی ہے

ہوٹل میں ایک سیاح داخل ہوا

ایک بادشاہ نے خوش ہو کر

ﭘﮍﻭﺱ ﮐﺎ ﻣﮑﺎﻥ ﭘﺮﺍﻧﺎ ﺗﮭﺎ ﺍﻭﺭ ﺍﺱ ﻣﯿﮟ ﺑﮩﺖ ﺳﮯ ﻟﻮﮒ ﺭﮨﺘﮯ ﺗﮭﮯ

خلاف توقع بابا جی کے ہاتھ میں سمارٹ فون تھا

ایک آٹھ سال کا بچہ

یمن کا بادشاہ تُبّع خمیری

لو بھلا بتاؤ۔ ۔ ۔ گھر میں برکت ہو، تو کیسے ہو؟

ہر روز صبح سویرے اپنے کام پر جاتی تھی

ہوشیار خبردار

نائی اور غربت دی چس

جب میں نے اپنی بیوی کو (شادی سے پہلے) پسند کیا

نماز ختم ہونے کے بعد جب وہ مسجد سے نکلنے لگا

وقت کا ولی

ایک تجربہ گاہ میں ایک سائنس دان

بچے نے سمندر ميں اپنا جوتا کھو ديا

پیزا بنانا چاہ رہی تھیں

عبدالغفور جیسی موت

ایک خوددار پردیسی کی ڈائری کے کچھ اوراق

جہانگیر صاحب کی گاڑی

ایک شخص سمندر کے کنارے واک کر رہا تھا

مامتا تو وکھری وکھری نہیں ہوتی پھیکے۔۔۔! مائیں وکھو وَکھ ہوئیں تو کیا۔۔۔؟