Page Nav

TRUE

Left Sidebar

False

تازہ ترین

latest

مرنے کے بعد دوبارہ زندہ ہونا - اللہ تعالیٰ اس پر قادرہے

یٰۤـاَ اَيُّـهَـا الـنُّـاسُ ۔*********** قسط نمبر : ⫷٩⫸ ( سُوۡرَۃٌ الْحَجّ : ۵ تا ٦ ) 📖 ارشاد باری تعالیٰ ﷻ : یٰۤاَیّ...




یٰۤـاَ اَيُّـهَـا الـنُّـاسُ
۔***********
قسط نمبر : ⫷٩⫸
( سُوۡرَۃٌ الْحَجّ : ۵ تا ٦ )

📖 ارشاد باری تعالیٰ ﷻ :
یٰۤاَیُّہَا النَّاسُ  اِنۡ  کُنۡتُمۡ فِیۡ رَیۡبٍ مِّنَ الۡبَعۡثِ فَاِنَّا خَلَقۡنٰکُمۡ مِّنۡ تُرَابٍ ثُمَّ مِنۡ نُّطۡفَۃٍ  ثُمَّ مِنۡ عَلَقَۃٍ  ثُمَّ مِنۡ مُّضۡغَۃٍ مُّخَلَّقَۃٍ  وَّ غَیۡرِ مُخَلَّقَۃٍ  لِّنُبَیِّنَ لَکُمۡ ؕ وَ نُقِرُّ  فِی الۡاَرۡحَامِ مَا نَشَآءُ  اِلٰۤی اَجَلٍ مُّسَمًّی ثُمَّ نُخۡرِجُکُمۡ طِفۡلًا ثُمَّ  لِتَبۡلُغُوۡۤا  اَشُدَّکُمۡ ۚ وَ مِنۡکُمۡ  مَّنۡ یُّتَوَفّٰی وَ مِنۡکُمۡ مَّنۡ یُّرَدُّ  اِلٰۤی  اَرۡذَلِ الۡعُمُرِ لِکَیۡلَا یَعۡلَمَ مِنۡۢ بَعۡدِ عِلۡمٍ شَیۡئًا ؕ وَ تَرَی الۡاَرۡضَ ہَامِدَۃً  فَاِذَاۤ  اَنۡزَلۡنَا عَلَیۡہَا الۡمَآءَ   اہۡتَزَّتۡ وَ  رَبَتۡ وَ اَنۡۢبَتَتۡ مِنۡ  کُلِّ  زَوۡجٍ ۢ  بَہِیۡجٍ ﴿۵﴾ ذٰلِکَ بِاَنَّ اللّٰہَ ہُوَ الۡحَقُّ وَ اَنَّہٗ یُحۡیِ الۡمَوۡتٰی  وَ  اَنَّہٗ  عَلٰی کُلِّ  شَیۡءٍ  قَدِیۡرٌ ۙ﴿۶﴾

📚 ترجمہ :
اے لوگو ! اگر تمہیں دوبارہ زندہ ہونے کے بارے میں کچھ شک ہے تو ( ذرا سوچو کہ ) ہم نے تمہیں مٹی سے پیدا کیا ، پھر نطفے سے ، پھر ایک جمے ہوئے خون سے ، پھر ایک گوشت کے لوتھڑے سے جو ( کبھی ) پورا بن جاتا ہے ، اور ( کبھی ) پورا نہیں بنتا ، تاکہ ہم تمہارے لئے (تمہاری) حقیقت کھول کر بتا دیں ، اور ہم ( تمہیں ) ماؤں کے پیٹ میں جب تک چاہتے ہیں ، ایک متعین مدت تک ٹھہرائے رکھتے ہیں ، پھر تمہیں ایک بچے کی شکل میں باہر لاتے ہیں ، پھر ( تمہیں پالتے ہیں ) تاکہ تم اپنی بھر پور عمر تک پہنچ جاؤ ، اور تم میں سے بعض وہ ہیں جو ( پہلے ہی ) دنیا سے اٹھا لئے جاتے ہیں ، اور تمہی میں سے بعض وہ ہوتے ہیں جن کو بدترین عمر ( یعنی انتہائی بڑھاپے ) تک لوٹا دیا جاتا ہے ، یہاں تک کہ وہ سب کچھ جاننے کے بعد بھی کچھ نہیں جانتے ۔ اور تم دیکھتے ہو کہ زمین مرجھائی ہوئی پڑی ہے ، پھر جب ہم اس پر پانی برساتے ہیں تو وہ حرکت میں آتی ہے ، اس میں بڑھوتری ہوتی ہے ، اور وہ ہر قسم کی خوشنما چیزیں اگاتی ہے ۔ ﴿۵﴾ یہ سب کچھ اس وجہ سے ہے کہ اللہ ہی کا وجود برحق ہے ، اور وہی بے جانوں میں جان ڈالتا ہے ، اور وہ ہر چیز پر مکمل قدرت رکھتا ہے ﴿٦﴾

✍ تفسیر :
 جو لوگ مرنے کے بعد دوبارہ زندہ ہونے کو ناممکن یا مشکل سمجھتے ہیں، اُن سے کہا جا رہا ہے، کہ اگر یہ دھوکا لگ رہا ہے کہ ریزہ ریزہ ہو کر دوبارہ کیسے جی اٹھیں گے تو خود اپنی تخلیق پر غور کرو کہ اللہ تعالیٰ نے کس حیرت انگیز طریقے پر کتنے مرحلوں سے گذار کر تمہیں پیدا فرمایا تھا۔ تمہارا کوئی وجود نہیں تھا، اللہ تعالیٰ نے تمہیں وجود بخشا، تم میں جان نہیں تھی، اللہ تعالیٰ نے تم میں جان ڈالی۔
یعنی اول تمہارے باپ آدم کو مٹی سے، پھر تم کو قطرہ منی سے بنایا، یا یہ مطلب ہے کہ مٹی سے غذا نکالی جس سے کئی منزلیں طے ہو کر نطفہ بنا، پھر نطفہ سے کئی درجے طے کر کے تمہاری تشکیل و تخلیق ہوئی۔ جس ذات نے اس حیرت انگیز طریقے سے تمہیں اُس وقت پیدا کیا جب تم کچھ بھی نہیں تھے تو کیا وہ تمہیں مردہ لاش بننے کے بعد دوبارہ زندگی نہیں دے سکتا؟

نطفہ سے جما ہوا خون اور خون سے گوشت کا لوتھڑا بنتا ہے۔ جس پر ایک وقت آتا ہے کہ آدمی کا پورا نقشہ (ہاتھ، پاؤں، آنکھ، ناک وغیرہ) بنا دیا جاتا ہے۔ اور ایک وقت ہوتا ہے کہ ابھی تک نہیں بنایا گیا۔ یا یہ مطلب ہے کہ بعض کی پیدائش مکمل کر دی جاتی ہے اور بعض یونہی ناقص صورت میں گر جاتا ہے۔ یا یوں کہا جائے کہ بعض بے عیب ہوتا ہے، بعض عیب دار۔ بعض اوقات تو اس گوشت کے لوتھڑے سے ماں کے پیٹ میں بچے کے اعضا پورے بن جاتے ہیں، اور بعض اوقات پورے نہیں بنتے۔ پھر بعض اوقات اسی نامکمل حالت میں عورت کو اسقاط ہو جاتا ہے، اور بعض اوقات بچہ ناقص اعضاء کے ساتھ پیدا ہوتا ہے۔ زیادہ بُڑھاپے کی حالت میں اِنسان بچپن کی سی ناسمجھی کی طرف لوٹ جاتا ہے، اور جوانی میں اس نے کتنا علم حاصل کیا ہو، اس بُڑھاپے میں وہ سب یا اکثر حصہ بھول جاتا ہے۔
 یہ دوبارہ زندگی دینے کی دوسری دلیل ہے، اور وہ یہ کہ زمین جب خشک ہوتی ہے تو اُس میں زندگی کے آثار ختم ہو جاتے ہیں، پھر اللہ تعالیٰ بارش برسا کر اُس میں زندگی کی نئی لہر دوڑا دیتا ہے، اور اُسی بے جان زمین سے پودے اُگنے لگتے ہیں۔ جو خدا اس پر قادر ہے، کیا وہ تمہیں دوبارہ زندگی دینے پر قادر نہیں؟
مطلب یہ ہے کہ تمہاری اپنی تخلیق ہو یا زمین سے پودے اگانے کا معاملہ، ان ساری باتوں کی اصل علت یہ ہے کہ اللہ تعالیٰ ہی کا وجود ایسا ہے جو کسی کا محتاج نہیں اور باقی ساری چیزیں اسی کی قدرت سے وجود میں آتی ہیں۔ لہٰذا وہ مردوں کو زندہ کرنے کی بھی پوری قدرت رکھتا ہے۔

ﷲ رب العزت ہمیں قرآنِ پاک پڑھنے، سمجھنے آور اس پر عمل کرنے کی توفیق عطا فرمائے۔ آمین ۔
🔰WJS🔰