Page Nav

TRUE

Left Sidebar

False

تازہ ترین

latest

تیمم کی مشروعیت

تیمم کی مشروعیت فرمانِ باری وان کنتم مرضی او علی سفر او جاء احد منکم من الغائط او لامستم النساء فلم تجدوا ماء فتیمموا صعیدا ...




تیمم کی مشروعیت

فرمانِ باری
وان کنتم مرضی او علی سفر او جاء احد منکم من الغائط او لامستم النساء فلم تجدوا ماء فتیمموا صعیدا طیبا فامسحوا بوجوھکم وایدیکم ان اللہ کان عفوا غفورا
(النساء: 43)

اور اگر تم بیمار ھو یا سفر پر ھو یا تم میں سے کوئی قضائے حاجت کی جگہ سے آیا ھو یا تم نے عورتوں کو چھوا ھو تو پھر پانی نہ ملے تو پاک مٹی سے تیمم کرلو اور اپنے چہروں اور ھاتھوں کا (اس مٹی سے) مسح کرلو۔ بیشک اللہ بڑا معاف کرنے والا بڑا بخشنے والا ھے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

ارشادِ نبوی
فضّلنا علی الناس بثلاث ، جعلت صفوفنا کصفوف الملائکۃ وجعلت لنا الارض کلھا مسجدا وجعلت تربتھا لنا طھورا اذا لم نجد الماء
(رواہ مسلم عن ابی حذیفۃ)

ھمیں تین چیزوں کے ذریعے (لوگوں پر) فضلیت دی گئی ھے۔
۔۔۔۔۔   ۔۔
1. ھماری صفوں کو فرشتوں کی صفوں کی مثل بنایا گیا ھے۔
۔۔۔۔۔۔
2. ساری زمین کو ھمارے لئے مسجد بنا دیا گیا ھے۔
۔۔۔۔۔۔
3. اور زمین کی مٹی کو ھمارے لئے پاک بناگیا ھے اگر ھم پانی کو نہ پائیں(پانی میسر نہ ھو)
۔۔۔۔۔۔۔۔۔